حمل بار بار کیوں گرجاتا ہے؟

حمل بار بار کیوں گرجاتا ہے؟

Table of Contents

ایک سوال کیاگیا ہے؟ حمل باربار کیوں گرجاتا ہے؟ حمل گرنے کی سب سے بڑ ی وجہ غ صہ  ہے ۔ غ صہ  ہے۔ غ صہ  کس کی وجہ  سے ہوتا ہے؟ ش یطان کی وجہ سے ہوتا ہے۔  ایک چیز بڑی عام ہے جس کو نظر کہتےہیں۔ نظر کس کی وجہ سے ہے؟ وہ بھی ش یطان کی وجہ سے  ہے ۔ دوسرا کام آپ کے جسم کچھ ایسے کیمیکلز آجاتے ہیں ۔ کچھ ایسے ہارمونزآجاتے ہیں۔ جو آپ کی نالیوں  کو کھول دیتے  ہیں۔ اس کو ایگرینا لین بولتے ہیں۔ جب نالیاں کھل جاتی ہیں۔ تو ان نالیوں کا خ ون کا بہاؤ تیز ہوجاتا ہے۔ اورجب ان نالیوں کا بہاؤ تیز ہوتا ہے۔ توآپ کے چہرے کی رنگت ، آپ کے جسم کی رنگت سرخ ہوجاتی  ہے۔ اب جب یہ ساری جگہ میسج ملتا نہیں ہے ۔ جب وہ کنٹرول ٹوٹتا ہے تو آپ کے یوٹرس جو زائیگوٹ چپکا ہوتا ہے۔ وہ اپنی جگہ چھوڑ دیتا ہے۔

اور جگہ جیسے ہی چھوٹتی ہے۔ وہ ڈلیور ہوجاتا ہے۔ تو کس  کی وجہ سے ہوئی ڈلیوری ؟ حمل کس کی وجہ سے گرا؟ اللہ کے نبی ﷺ سے ایک صحابی نے پوچھا : اللہ کے نبی مجھے نصیحت کیجئے۔آ پ نے فرمایا: ” لاتکذب” غ صہ  مت کرو۔ غ صہ  مت کرو۔ آج کے معاشرے کا سب سے بڑا ناسور غ صہ  ہے ۔ اس نے مردوں کی زندگیاں برباد کیں ہیں۔ سب سے زیادہ نسلیں برباد کردیں۔ غ صہ  مت کرو۔ واللہ! یہ جتنی بہنیں جن کے حمل ضائع ہوتے ہیں۔ آپ ان کو دیکھ لو ۔ پچانوے فیصد بہنیں انتہائی غصے والی ہوتی ہےآگ برستی ہیں۔ ان کے اندر سے آگ نکلتی ہے۔ دوسرے نمبر کچھ ہارمونز ان بیلنس ہوجاتے ہیں۔ ہمارے باڈی میں کچھ ہارمونزان بیلنس ہوجاتے ہیں۔ ان ہارمونز ان بیلنس ہونے کی وجہ سے جو حمل ٹھہر ہوتا ہے وہ ضائع ہوجاتا ہے۔

اور ہارمونز ان بیلنس کی دنیا میں سب سے بہترین دوائی لمبا سجد ہ ہے۔ لمبا سجدہ جب کرو گے ۔ تو خ ون کہاں جائے گا؟ دماغ میں ۔ جب دماغ میں خ ون جائےگا۔ تو دماغ کے جو ہارمونز  پیدا کرنے ہیں۔ کیمیکلز پیدا کرنے ہوتے ہیں۔ وہ پرفیکٹ ہوں گے ۔ اور اسکے ساتھ بہترین دوائی کلونجی اور میتھی دانہ ہے۔ سو گر ام کلونجی اور سوگرام میتھی دانہ لو۔ ان دونوں  کو مکس کرلو۔ یہ ہر بیماری کا علاج ہے۔ ایک بار کرکے دیکھو لو۔ دو باتیں  ہیں۔ یا صیحح کہہ رہے ہیں۔ یا جھوٹ کہہ رہے ہیں۔ ایک دفعہ کرکے دیکھ لو۔ آپ کو سانس کا مسئلہ ہے ۔آپ بھی کلونجی اور میتھی دانے کا پانی پیو۔ جس کے سپر مز کمزور ہیں۔ سپرمز کی تعداد کم ہیں۔ وہ بھی کلونجی اور میتھی دانہ پئیں۔ جس کے جوڑؤں کا درد ہے۔ وہ بھی کلونجی اور میتھی دانہ پیو۔

کیونکہ جناب محمدﷺ نے فرمایاکہ : اس کالے دانے میں م و ت کے سوا ہر بیماری کی شفاء ہے۔ سوگرام کلونجی اور سوگرا م میتھی دانہ  لیں۔ ان دونوں کو مکس کر لیں۔ رات کو مٹی کے برتن میں چار گلاس پانی لیں۔ تین چمچ کلونجی اور میتھی دانہ کے ڈالیں۔دو لیموں ڈالو۔ جن کو شوگر ہے و ہ گڑ نہیں ملائے گا۔ جن کو شوگر نہیں ہے ۔ وہ اس میں تین چمچ گڑ ملاؤ۔ اور اس کو اتنا پکا ؤ  کہ چار گلاس پانی تین گلاس رہ جائے۔ پھر اس کو ٹھنڈا کر و۔ پھر اس کو مٹی کے جگ میں ڈال لو۔  اور ایک گلاس صبح، ایک دوپہر ا ور ایک شام کھانے سے آدھا گھنٹے پہلے یہ پیو۔  بلکہ جن کو شوگر ہے۔ واللہ! نوے دن یہ پی کر دیکھیں۔ اللہ کی قسم ! جھوٹے پر لعنت  ہے۔ ایک بھائی کہتا ہے میں ایک سو بیس یونٹ انسولین  لگاتا تھا۔ میں نے آٹھ مہینے یہ استعمال کیا۔ میری انسولین سوفیصد ختم ہوگئی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *